وگ اور نقلی داڑھی لگانے سے نمازمکمل نہیں ہوتی

منگل, 09 اگست 2016 16:31

اس حوالے سے جاری فتویٰ میں کہا گیا ہے کہ نماز کے دوران ’وگ‘یا نقلی داڑھی لگانے سے نماز مکمل نہیں ہوتی۔بھارت میں مستند سمجھے جانے والے مدرسہ دارالعلوم دیوبندنے فتویٰ جاری کیا ہے کہ ’دوران نماز سر پر وگ رکھنا اور پھر نماز پڑھتے وقت جعلی داڑھی لگانا ناجائز ہے اس سے نماز مکمل نہیں ہوتی۔
فتویٰ سے متعلق تفصیلات بتاتے ہوئے دارالعلوم کے ترجمان اشرف عثمانی کا کہنا تھا کہ غسل اور وضو دو لازم چیزیں ہیں جب کہ وگ سے غسل اور وضو دونوں مکمل نہیں ہوسکتے کیونکہ اس سے سر تک پانی نہیں پہنچتا۔ تاہم ترجمان نے کہا کہ اس کا ایک اور راستہ ہے کہ اگر کوئی وگ کے بغیر نہیں رہ سکتا تو اسے چاہئے کہ وہ غسل اور وضو کے وقت وگ اتار دیں اور نماز کے وقت سر پر رکھ لیں۔
عثمانی کا مزید کہنا تھا کہ دارالعلوم کو ایسے افراد سے کوئی مسئلہ نہیں ہے جو بالوں کا ٹرانسپلانٹ کراتے ہیں کیونکہ وہ عام بالوں کی طرح ہوتے ہیں اور پانی ان میں سے گزر کر جلد تک پہنچ جاتا ہے۔
ترجمان کا کہنا تھا کہ دارالعلوم کو اس ضمن میں متعدد افراد نے خطوط لکھے تھے جس کے بعد کئی علما نے اس پر مشاورت اور غوروخوض کے بعد مذکورہ فتویٰ جاری کیا ہے۔یہ فتویٰ قرآن و سنت کی تعلیمات کے مطابق ہے۔

Read 386 times

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

Pakistanviews.org

pakistanviews.org stands as a website enlightening the masses with all information related to current affair, entertainment, sports, technology, etc. It has been brought into existence to ensure that voice of Pakistan reaches the masses. Ensuring that a true picture of Pakistan is portrayed in the right manner to the world. The website is to bring forth the real picture of Pakistan negating avenues of Terrorism and Non-State Acto