پرنس کی موت کا سبب دردکش دوا کی زیادہ مقدار

منگل, 07 جون 2016 15:37

طبی جانچ کرنے والوں کا کہنا ہے کہ عالمی شہرت یافتہ امریکی گلوکار پرنس کی موت کا سبب درد کش خواب آور دوا ’فینٹانیل‘ کی غلطی سے زیادہ مقدار لینا ہے۔

مینیسوٹا میں مڈویسٹ میڈیکل اکزامنر کے دفتر کی رپورٹ گلوکار کی موت کے تقریبا ڈیڑھ ماہ بعد آئی ہے۔

57 سالہ امریکی گلوکار 21 اپریل کو امریکی ریاست منیسوٹا کے شہر مینیاپلس میں ان کے گھر پر ایک لفٹ میں مردہ پائے گئے تھے۔

اس سے قبل تفیش کاروں نے اس بات پر سوال اٹھائے تھے کہ گلوکار کی موت سے قبل والے ہفتے میں ایک ڈاکٹر ان سے دو بار ملنے آئے تھے۔

حکام نے مئی میں کہا تھا کہ ان کی موت کے بعد درد کش (پین کلر) دوا کا نسخہ ان کے گھر سے ملا تھا۔

پولیس کے وارنٹ میں بھی یہ بات سامنے آئی ہے کہ ڈاکٹر مائیکل شولنبرگ نے پرنس کی موت سے ایک دن قبل 20 اپریل کو دوائیں لکھی تھیں۔

تاہم اس میں یہ نہیں کہا گیا ہے نسخے میں کون سی دوا تھی اور کیا پرنس نے وہ دوائیں لی ت

ھیں۔؟

آٹوپسی کی رپورٹ کے مطابق پرنس نے خود سے فینٹانیل دوا لی تھی یہ افیون کے اثرات والی دوا ہیروئن سے کئی گنا زیادہ طاقتور ہے۔

دنیا بھر سے پرنس کے چاہنے والوں نے انھیں خراج عقیدت پیش کیا تھا۔

دریں اثنا پرنس کی موت کے بعد ان کے لواحقین نے ان کی جائیداد کا بٹوارہ کرنا شروع کر دیا ہے۔

واضح رہے کہ پرنس راجرز نیلسن کی کوئی تحریری یا زبانی طور پر وصیت سامنے نہیں آئی اور ان کی جائیداد کی مالیت دس کروڑ ڈالر کے قریب ہے۔

گلوکار کے لواحقین اگست میں ان کی یادگار قائم کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

Read 1271 times

Leave a comment

Make sure you enter the (*) required information where indicated. HTML code is not allowed.

Pakistanviews.org

pakistanviews.org stands as a website enlightening the masses with all information related to current affair, entertainment, sports, technology, etc. It has been brought into existence to ensure that voice of Pakistan reaches the masses. Ensuring that a true picture of Pakistan is portrayed in the right manner to the world. The website is to bring forth the real picture of Pakistan negating avenues of Terrorism and Non-State Acto